Ultimate magazine theme for WordPress.

Tanhai Poetry in Urdu with Pictures – Heart Touching Alone Poetry

0 37

Tanhai Poetry in Urdu with Pictures – Heart Touching Alone Poetry.

Tanhai Poetry in Urdu with Pictures

احساس نہیں تھا کے تنہا ہوں آج کل
تو نے سوال چھیڑکے اچھا نہیں کیا

Ehsas nahi tha ke tanha hon aaj kal
To ne sawal chair Ke acha nahi kya

tanhai poetry in urdu

اک رات ہوئی برسات بہت، میں رویا ساری رات بہت

ہر غم تھا زمانے کا لیکن، میں تنہا تھا اس رات بہت

ik raat hui barsaat bohat, mein roya saari raat bohat
har gham tha zamane ka lekin, mein tanha tha is raat bohat

tanhai poetry in urdu

تیرے ہوتے ہوئے آجاتی تھی ساری دنیا
آج تنہا ہوں تو کوئی نہیں آنے والا

tairay hotay hue aa jati thi saari duniya
aaj tanha hon to koi nahi anay wala

tanhai poetry in urdu

کیوں چلتے چلتے رک گئے ویران راستو؟
تنہا ہوں آج میں ذرا گھر تک تو ساتھ دو

kyun chaltay chaltay ruk gaye weraan rasto?
tanha hon aaj mein zara ghar tak to sath do

tanhai poetry in urdu

تنہائیاں تمہارا پتہ پوچھتی رہیں
شب بھر تمہاری یاد نے سونے نہیں دیا

tanhaiiyan tumhara pata poochti rahen
shab bhar tumhari yaad ne sonay nahi diya

tanhai poetry in urdu

ہمیں بھی نیند آ جائے گی ہم بھی سو ہی جائیں گے
ابھی کچھ بے قراری ہے، ستارو تم تو سو جاؤ

hamein bhi neend aa jaye gi hum bhi so hi jayen ge
abhi kuch be qarari hai, sitaro tum to so jao

tanhai poetry in urdu

کچھ تو تنہائی کی راتوں میں سہارا ہوتا
تم نہ ہوتے، نہ سہی، ذکر تمہارا ہوتا

kuch to tanhai ki raton mein sahara hota
tum nah hotay, nah sahi, zikar tumhara hota

خود غرض ہوتا تو ہجوم ہوتا ساتھ
مخلص ہوں اِس لیے تو تنہا ہوں

khud gharz hota to hajhoom hota sath
mukhlis hon iss liye to tanha hon

tanhai poetry in urdu

جہاں تلک بھی یہ صحرا دکھائی دیتا ہے
مری طرح سے اکیلا دکھائی دیتا ہے

jahan talak bhi yeh sehraa dikhayi deta hai
meri terhan se akela dikhayi deta hai

tanhai poetry in urdu

اِس عید پر پھر ساتھ ہیں میرے
پردیس تنہائی اور بس تیری یادیں

iss eid par phir sath hain mere
pardes tanhai aur bas teri yaden

اپنے سائے سے چونک جاتے ہیں
عمر گزری ہے اس قدر تنہا

Apne saaye se choank jatay hain
Umar guzri hai is qader tanha

میں کیسے مان لوں کہ کوئی میرا نہیں رہا
جب تک خدا کی ذات ہے تنہا نہیں ہوں میں

mein kaisay maan لوںکہ koi mera nahi raha
jab tak kkhuda ki zaat hai tanha nahi hon mein

میری تنہائی کو میرا شوق نہ سمجھنا
بہت پیار سے دیا ہے یہ تحفہ کسی نے

meri tanhai ko mera shoq nah samjhna
bohat pyar se diya hai yeh tohfa kisi ne

tanhai poetry in urdu

سارا ہی شہر اس کے جنازے میں تھا شریک
تنہائیوں کے خوف سے جو شخص مر گیا

sara hi shehar is ke janazay mein tha shareek
tanhaiyon ke khauf se jo shakhs mar gaya

تنہائیوں کا اِک الگ ہی مزہ ہے
اِس میں ڈر نہیں ہوتا کسی کے چھوڑ جانے کا

tanhaiyon ka ik allag hi maza hai
iss mein dar nahi hota kisi ke chore jane ka

Read More:

Leave A Reply

Your email address will not be published.